ہمارے جوان دنیاوی تعلیم کےمختلف حلال شعبوں میں بھی لگن کے ساتھ قدم بڑھائیں

ہمارے جوان دنیاوی تعلیم کےمختلف حلال شعبوں میں بھی لگن کے ساتھ قدم بڑھائیں

22/9/2019




مرجع مسلمین و جہانِ تشیع حضرت آیۃ اللہ العظمیٰ الحاج حافظ بشیر حسین نجفی دام ظلہ الوارف نے مرکزی دفتر نجف اشرف میں زیارت کوآئےحرم حضرت امیر المؤمنین علی بن ابیطالب علیھما السلام میں رضاکارانہ طور پر خدمت انجام دینے والے جوانوں کے وفد سے اپنی پدرانہ  نصیحتوں اور ضروری ارشادات میں فرمایا کہ خدا کے نزدیک حضرت امام حسین علیہ السلام کی زیارت کی عظیم منزلت ہے اور اسی سبب سے جنت میں رہنے والے خدا سے اجازت طلب کرکےحضرت امام حسین علیہ السلام  کی زیارت کو آتے ہیں جیسا کہ روایات سے واضح ہوتا ہے۔
مرجع عالی قدر دام ظلہ الوارف نےان سے فرمایا کہ اللہ نے زائرین کی خدمت کی نعمت سے جو آپ کو نوازا ہے یہ دنیا و آخرت میں آپ کے لئےعظیم شرف ہے یہ توفیق الٰہی ہے اور حقیقی کامیابی یہی ہے اسلئے کہ زائرین کی خدمت عظیم شرف ہے اورجیسا کہ روایتوں میں ملتا ہے کہ فرشتے زائرین حضرت امام حسین علیہ السلام کی خدمت کو اپنے لئے باعث فخر و شرف سمجھتے ہیں۔
مرجع عالی قدر دام ظلہ الوارف نے فرمایا کہ ضروری ہے کہ اس عظیم عمل کے ساتھ ساتھ دوسرے اعمال بھی خالصتا قربۃ الی اللہ ہونے کے ساتھ ساتھ اس سے تقرب الہی اور مرضی پروردگار کا قصد ہواور تقرب الہی کا مطلب دنیا و آخرت کی کامیابی ہے۔
مرجع عالی قدردام ظلہ الوارف نےجوانوں کودعوت  دیتے ہوئے فرمایا کہ ہمارا اخلاق اخلاقِ اہلبیت علیہم السلام اور انکی حیات طیبہ کاعکاس ہو تاکہ ہم میں سے ہر جوان معاشرے کے دوسرے جوانوں کے لئے ہدایت کا روشن چراغ بنے۔
مرجع عالیقدر دام ظلہ الوارف نے مزید فرمایا کہ عبادات کے ساتھ ساتھ ضروری ہے کہ انسان کے سلوک، اسکے اخلاق میں اور پھر معاشرے میں مثبت تبدیلی آئے اور اگر ایسا نہ ہوا تو ہم اپنی عبادتوں کے ذریعہ ہدف کو حاصل نہیں کرسکتے اسلئے لازمی ہے کہ روزانہ کم از کم ایک مرتبہ اپنے نفس کا محاسبہ کیا جائےاورہرایک قول وفعل پر غور کریں اگر افعال حسنہ انجام دیئے ہیں تو اس پر خدا کا شکر ادا کریں اور اسکی قبولیت کی التجا کریں اور اگر العیاذ باللہ افعال قبیحہ کا مرتکب ہوا ہے تو توبہ کرے اور اپنے ہرغلط عمل کو درست کرے۔
انہوں نےفرمایا کہ جوانوں کو چاہئے کہ وہ لگن اور اخلاص کے ساتھ علم حاصل کریں اوردنیاوی تعلیم کے مختلف حلال شعبوں میں قدم بڑھائیں تاکہ امتیازی حیثیت حاصل کرکے اپنے ملک کا نام روشن کریں اور اپنے اور اپنی قوم و ملک کے مستقبل کو روشن بنائیں۔
مرجع عالی قدر دام ظلہ الوارف نے مذکورہ جوانوں سے فرمایا کہ عراق کے پاس ہرطرح کی صلاحیت موجود ہے، عراق ایک تاریخی اور امتیازی عقل و فکر و ادراک  کے حامل لوگوں کا ملک ہونے کے ساتھ ساتھ خدائی نعمتوں سے مالامال ہے اور جغرافیائی طور پر ایک مہم حیثیت کا حامل ہے اسلئے آپ لوگوں کو دعوت دیتا ہوں  کہ علم کے ذریعہ عراق کو دنیا کے صف اول کے ملکوں میں لے جائیں اور میری یہی تمنا بھی ہے کہ علمی میدان میں آپ لا ثانی ہوں اور یہ سب کچھ نفوس اور عقول کی تربیت اور خدا کی اطاعت اور وطن کی محبت کے بغیر ممکن نہیں ہے۔
آئے ہوئے وفد نے مرجع عالی قدر دام ظلہ الوارف کا نصیحتوں پر شکریہ ادا کرتے ہوئے ان پر عمل کرنے کا وعدہ کیا۔


بھیجیں
پرنٹ لیں
محفوظ کریں