اس تاریخی ملاقات نےدنیا کےسامنےنجف اشرف کی اہمیت کومزید واضح کیا ہے

اس تاریخی ملاقات نےدنیا کےسامنےنجف اشرف کی اہمیت کومزید واضح کیا ہے



17/3/2021


مرجع مسلمین وجہانِ تشیع حضرت آیۃ اللہ العظمیٰ الحاج حافظ بشیر حسین نجفی دام ظلہ الوارف کےفرزند اورمرکزی دفترکےمدیرحجۃ الاسلام شیخ علی نجفی دام عزہ نےمتعدد  صحافیوں اورچینلوں سے  بات کرتےہوئےعراقی عوام کو دعوت دی کہ وہ اپنی تاریخی شناخت و پہچان سےاصلاح اورتعمیر نو میں فائدہ اٹھائیں۔
انہوں نےفرمایا کہ عراق مختلف ادیان و ثقافتوں کو اپنی آغوش میں لئےہوئےہے،عراق تاریخ رقم کرنےوالا ملک ہے اسلئے ضروری ہے  کہ اپنی پہچان،اپنی شناخت کونہ صرف باقی رکھیں بلکہ حتی المقدور  اس کا دفاع بھی کریں اوراپنےمستقبل کی بناء اس پررکھیں۔
حجۃ الاسلام شیخ علی نجفی دام عزہ نےبیان کیا کہ اس ملاقات( حضرت آیۃ اللہ العظمیٰ سید علی حسینی سیستانی دام ظلہ الوارف اور پوپ فرینسس کی ملاقات) نےایک بار پھر پوری دنیا  کو نجف اشرف  کی اہمیت کا احساس دلایا ہےاورعراقیوں کو اس نعمت پرفخر کرنا چاہئے،انہوں نے مزید فرمایا کہ اس ملاقات کی اہمیت اسلئے بھی ہے کہ اس ملاقات میں دونوں شخصیتیں اپنے ماننے والوں اور اپنے اپنے مذہب والوں کے نزدیک مہم شخصیت کا درجہ رکھتی ہیں۔
دینی ومذہبی پس منظرمیں اس ملاقات نےبےدینی،الحاد اور بد اخلاقیت کےمقابل دین سے وابستگی کومضبوط کیا ہے۔
انہوں نےفرمایا کہ دنیا عراق کواسکی تاریخ اورنجف اشرف کو روحانیت سےبھری اسکی تاریخ کی وجہ سےالگ نظریےسے دیکھتی ہےاور پوپ  فرینسس کا عراق حج (پوپ کی تعبیرکا یہ حصہ ہے) کی صورت آنا اسی عالمی نظریے کی عکاس ہے۔
حجۃ الاسلام شیخ علی نجفی دام عزہ نےمزید بیان کیا کہ اس تاریخی دورے کو کامیابی سے ہمکنارکرکےعراق نے یہ ثابت کردیا ہےکہ اس کےپاس ماہرین اورصلاحیتوں کی کمی نہیں ہےاوروہ انہیں پرتکیہ  کرتےہوئےاپنےمستقبل کی تعمیر نو کرسکتا ہےعراقیوں نےاگر کسی بات پر اتفاق کرلیا اورآپسی تعاون کو یقینی بنا لیا تو بلا شک و شبہ وہ کامیابی سے نتیجےحاصل کرسکتے ہیں اور پوپ کےسفرسے یہ بات اورکھل کر سامنے آئی ہےاسلئےضروری ہےکہ سب ملکر آپسی تعاون سےعراق کےمستقبل اورتعمیر نو پرکام کریں اوراس کےلئے ہرممکنہ طاقت و قوت کا استعمال کریں۔




ٹیلیگرام کے نجفی چینل کو جوائن کریں


بھیجیں
پرنٹ لیں
محفوظ کریں