شعائر حسینیہ کا معاشرے کو دین سے متمسک رکھنے اور تقرب الہی کے حصول میں عظیم کردار ہے

شعائر حسینیہ کا معاشرے کو دین سے متمسک رکھنے اور تقرب الہی کے حصول میں عظیم کردار ہے

4/9/2021




مرجع  مسلمین و جہانِ تشیع حضرت  آیۃ اللہ  العظمیٰ  الحاج حافظ  بشیر حسین نجفی  دام ظلہ  الوارف    کے  فرزند اور مرکزی  دفتر کے  مدیر حجۃ الاسلام  شیخ علی  نجفی  دام عزہ  نے  ایام  عزا  میں  مختلف  صوبوں  میں  مختلف مقامات  پر  مجالس عزا میں  شرکت  فرمائی اور  شعائر حسینیہ  کے  احیاء  میں انکی  کوششوں  کو سراہا اور حاضرین  سے  اپنے  خطاب  میں  مرجع عالی قدر  دام ظلہ الوارف کی  دعائیں اور نصیحتیں  نقل فرمائیں  ۔
 اسی  ضمن  میں  موصوف  نے  صوبہ  بابل کا دورہ  کیا   اور وہاں  موکب  امام حسن مجتبی ؑ  کی  جانب  سے  منعقدہ  مجلس میں  شرکت  فرمائی اورحاضرین سے  خطاب  کیا  ۔
حجۃ الاسلام  شیخ علی  نجفی  دام عزہ  نے  اپنے  خطاب  میں   شعائر  حسینیہ  کے  احیاء  اور اسکی بقا  کی اہمیت  پر  گفتگو  کرتے  ہوئے  بیان  کیا  کہ   شعائر  حسینیہ  کا احیاء  در حقیقت  شعائر  دینیہ  کا احیاء  ہے   اور   شعائر حسینیہ کا  معاشرے  کو دین  سے  متمسک  رکھنے   اور تقرب الہی  کے حصول میں  عظیم کردار  ہے  
 خاص  کر  جب  کہ  ہم   پورے مسلم معاشرے  اور  بالخصوص  جوانوں کو مذہبی شناخت  و پہچان  سے   دور  کرنے  کی  کوششوں  کے  تحت   فکری اور ثقافتی  حملوں  کا سامنا  کر رہے  ہیں  ۔
انہوں  نے  عزا   کے اہتمام  میں  شعائر حسینیہ   میں شریک  مومنین  کی  جانوں  کی  حفاظت  کی  خاطر  طبی ارشادات   کی  پابندی  پر بھی  تاکید  فرمائی  ۔ انہوں  نے  مزید فرمایا  کہ  ہمیں کربلاء سے  دروس و عبرت   حاصل  کرنا چاہئے   اور  یہ  یقینی  بنانا چاہئے  کہ  ہم اہلبیت  علیھم السلام  کے بتائے  ہوئے  راستے  کے پابند  ہوں  اور حضرت امام حسین علیہ  السلام  کی  سیرت   پر عمل پیرا  ہوں ۔
 مذکورہ ضمن میں  موصوف  نے  صوبے  میں  مختلف مقامات  پر جاکر  عزاء حسینی  میں  شرکت  فرمائی اور خاص  کر  مزار شریفہ  ؓ  پر پرچم کشائی  کی  تقریب  میں بھی  شرکت  فرمائی  ۔